علی امین گنڈا پور کی ضمانت قبل از گرفتاری

13

اسلام آباد (کورٹ رپورٹر)کی انسدادِ دہشت گردی عدالت نے جوڈیشل کمپلیکس حملہ کیس میں وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا علی امین گنڈا پور کی ضمانت قبل از گرفتاری 17 اپریل تک منظور کر لی۔

وہ اسلام آباد کی عدالت میں پیش ہوئے۔

وکیل راجا ظہور الحسن نے بتایا کہ علی امین گنڈاپور فرسٹ انفارمیشن رپورٹ (ایف آئی آر) میں نامزد ہیں مگر ان کا کردار کوئی نہیں، علی امین گنڈاپور موقع پر موجود ہی نہیں تھے۔

وکیل راجا ظہور الحسن نے مؤقف اپنایا کہ علی امین گنڈاپور کے خلاف 50 ایف آئی آر درج ہوئیں، علی امین گنڈاپور کو عدالت تک پہنچنے بھی نہیں دیا جاتا رہا۔

عدالت نے علی امین گنڈا پور کی ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست منظور کر لی اور 50 ہزار روپے کے ضمانتی مچلکے جمع کرانے کی ہدایت کر دی۔

قبل ازیں، وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا علی امین گنڈا پور نے تھانہ سی ٹی ڈی میں درج مقدمے میں ضمانت قبل از گرفتاری کے لیے انسداد دہشت گردی عدالت سے رجوع کیا تھا۔

علی امین گنڈا پور کے وکیل راجا ظہور الحسن نے ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست انسداد دہشت گردی عدالت میں دائر کی تھی، جس میں مؤقف اپنایا گیا تھا کہ جھوٹی ایف آئی آر کی کہانی من گھڑت ہے ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.