سعودیہ، امارات اور روس کا تیل کی پیداوار نہ بڑھانے کا فیصلہ

25

ریاض (مانیٹرنگ سیل)سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور روس نے تیل کی پیداوار میں رضاکارانہ کمی برقرار رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

تیل برآمد کرنے والے تین بڑے ممالک کی طرف سے پیداوار و رسد بڑھانے سے انکار کے نتیجے میں عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمتیں مزید بڑھیں گی۔

سعودی عرب نے جولائی 2023میں پیداوار میں یومیہ 10لاکھ بیرل کی کمی کی تھی
،متحدہ عرب امارات کے سرکاری میڈیا کے مطابق
پیداوار میں ایک لاکھ 63ہزار بیرل یومیہ کمی برقرار رہے گی۔

اسکی مجموعی یومیہ پیدوار اس وقت 29لاکھ 12ہزار بیرل یومیہ ہے،
یو اے ای نے اپریل 2023میں پیداوار ایک لاکھ 44ہزار بیرل یومیہ گھٹادی تھی۔

روس نے پیداوار میں 4لاکھ 71ہزار بیرل یومیہ کمی کر رکھی ہے، یوکرین کی جنگ کے طول پکڑنے کے بعد سے روسی قیادت نے تیل کی برآمد کم کردی ہے۔

روس نے اس سے قبل تیل کی برآمد میں پانچ لاکھ بیرل یومیہ کمی پر رضامندی ظاہر کردی تھی۔تیل برآمد کرنیوالے ممالک کی تنظیم اوپیک کے ارکان نے گزشتہ نومبر میں پیداوار میں مجموعی طور پر 22لاکھ بیرل یومیہ کمی پر اتفاقِ رائے کرلیا تھا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.